چندایک تجدیدی کاموں کومختصراذکرکیاجاتاہے

دورہ حدیث کااجرا:جس کوالحمدللہ مقبولیت حاصل ہوئی،جس کا پانچواں بیج چل رہاہے۔
اسباق کی مضبوطی وحضرت صدرالجامعہ دامت برکاتہم العالیہ کی سچی لگن کودیکھ کراکابرعلماء کے اعتمادودعاؤں میں مزیداضافہ ہوا،جوکہ جامعہ کے مستقبل کیلئے نیک شگون ہے۔
زیرتعمیرمسجدکی توسیع وتکمیل:جامعہ کی مسجدجوکہ ایک عرصہ سے زیرتعمیرہے اس کاکام بھی ابھی جاری ہے،سائیڈوں کے برآمدوں کے پلرتومکمل ہیں البتہ چھت کے منتظرہیں،اسی طرح مسجدکے صحن کاکافی فرش لگ چکاہے ابھی کچھ حصہ باقی ہے۔
ماہنامہ انوارااسلام کااجرا:اب یہ مجلہ ہرماہ بڑی آب وتاب کے ساتھ نظرقارئین ہوتاہے،اورمزے کی بات یہ ہے کہ اس مجلہ نے اپنی انتہائی کم عمری میں دوضخیم خصوصی نمبر”بنام حیات شاد ”اوربنام ‘جامعہ اشرفیہ کی نشأة ثانیہ”نمبربھی شائع کیے ہیں،جن کی اشاعت پراس مجلہ نے بحمداللہ بھرپوردادتحسین بھی حاصل کی ہے۔
بائیوگیس پلانٹ:جامعہ میں حضرت صدرالجامعہ دامت برکاتہم العالیہ کی محنت ،دعاؤں اوراہل خیرکی توجہ سے ایک بائیوگیس کاپلانٹ تیارکیاگیا،جس سے بحمداللہ اساتذہ کے ساتھ ساتھ جامعہ کے مطبخ کوبھی کافی فائدہ ہورہاہے۔
چالیس ہزارلٹرپرمشتمل واٹرٹینک کی تعمیر:جوکہ تقریبامکمل ہوچکاہے،ان شاء اللہ اب جامعہ میں پانی کی قلت کی تکلیف ختم ہوجائے گی۔
یادررہے کہ اس واٹرٹینک کوبھرنے کیلئے لگائی جانے والی ٹربائن کی بورچارسوفٹ تک گہری کروائی گئی ہے،تاکہ طلبہ کوصحت افزاپانی میسرہوسکے۔
چاردیواری کااجرا:آج جبکہ دنیااپنی بنیادی ضروریات سے آگے نکل کرآرائش وزیبائش اورمزیدسہولیات میں مصروف ہے،جامعہ ہذاکی بنیادی ضروریات بھی تشنہ ہیں،جن میں اہم ترین چیزجامعہ کی چاردیواری ہے، اللہ تعالی کے فضل وکرم سے کام شروع ہواجوکہ بحمداللہ اب تکمیل کے مراحل میں ہے،کچھ حصہ ابھی باقی ہے،اہل خیرکیلئے بہترین مصرف ہے۔
جامعہ ہذاکے زیرکفالت شاخیں:اس وقت جامعہ کے زیرکفالت ایک شاخ کام کررہی ہیں،مدرسہ علی المرتضی قائم والاکبیروالا
جامعہ کے اعزازات: جامعہ کیلئے یہ ایک بہت بڑااعزازہے کہ جامعہ ہذاضلع خانیوال کے مدارس میں تعدادطلبہ کے لحاظ سے دوسرے نمبرپرہے،اورجامعہ ہذاکویہ بھی اعزازحاصل ہے کہ جامعہ کی جامع مسجدمیں ہونے والی نمازباجماعت افرادکے لحاظ سے ضلع خانیوال کی مساجدومدارس میں ہونے والی نمازباجماعت سے دوسرے نمبرپرہے،اورجامعہ کوجمعہ کے اجتماع میں بھی کثیرافرادکے لحاظ سے دوسرانمبرحاصل ہے۔
جامعہ کاایک اعزازیہ بھی ہے کہ جامعہ کے ایک ہونہارطالب علم مولوی محمدشعیب نے ١٤٣٦ھ میں وفا ق المدارس العربیہ پاکستان کے تحت ہونے والے امتحان میں درجہ سابعہ میں صوبہ پنجاب کی سطح پرپہلی پوزیشن حاصل کی،جوکہ جامعہ کیلئے ایک اعزازسے کم نہیں۔باقی درجات کانتیجہ بھی الحمدللہ سوفی صدرہا۔
اس وقت الحمداللہ جامعہ میں درج ذیل سولہ شعبہ جات قائم ہیں،جوکہ بحمداللہ فعال ہیں۔